Home / خبریں / جگنو انٹرنیشنل کی دوسری سالانہ تقریب ِ تقسیم ایوارڈ اور عالمی مشاعرہ

جگنو انٹرنیشنل کی دوسری سالانہ تقریب ِ تقسیم ایوارڈ اور عالمی مشاعرہ

پروگرام کی صدارت اردو تحریک عالمی ۔برطانیہ کے صدر ڈاکٹر عبدالغفار نے کی
کیپٹن (ر)عطا محمد،ایگزیکٹو ڈائریکٹر الحمرا آرٹس کونسل،لاہور مہمانِ خصوصی تھے
اہلِ قلم و نقد ونظر کو انکی علمی ادبی کاوشوں کے اعزاز میں اسناد و ایوارڈ سے نوازا گیا
شعری مجموعہ ’’حرف اول‘‘ کی تقریب رونمائی اور عالمی مشاعرہ
تقریب کی نظامت کے فرائض چیف ایگزیکٹو تنظیم، محترمہ ایم زیڈ کنولؔنے ادا کئے
13015281_687079814728756_4886609978038719863_n
لاہور۔علمی،ادبی، سماجی و ثقافتی روایات کی امین تنظیم،جگنو انٹر نیشنل لاہورکے زیر اہتمام ۹۔اپریل 2016 بروز ہفتہ الحمرا آرٹس کونسل لاہورمیں سالانہ تقریبِ تقسیمِ ایوارڈ و مشاعرہ کا انعقاد ہوا۔جس میں پاکستان اور بیرون از پاکستان اہل علم و دانش اور شعراء کی بھاری تعداد نے شرکت کی ۔تقر یب کی صدارت ڈاکٹر عبدالغفار عزم بانی و صدر اردو تحریک عالمی یو۔کے نے فرمائی جبکہ مہمانِ خصوصی کیپٹن عطا محمد خاں، ایگزیکٹو ڈائریکٹر الحمرا آرٹس کونسل،لاہورتھے ۔نظامت کے فرائض ممتاز شاعرہ و ادیبہ ، ایڈیٹر احساس ،جرمنی ،چیف ایگزیکٹوجگنو انٹرنیشنل ایم زیڈ کنولؔ نے بحسن و خوبی ادا کئے ۔ پروگرام کا آغاز تلاوتِ کلامِ پاک سے کیا گیا۔ جس کی سعادت گولڈ میڈلسٹ قاری احمد ہاشمی کا نصیب بنی۔جبکہ نعتِ رسول مقبول ﷺ نوجوان انعام یافتہ نعت خواںغنا فاطمہ نے اپنی پُر سوز آواز میں پیش کی۔ مہمانوں کو پھولوں کے گلدستے پیش کر کے ان کا استقبال کیا گیا۔تقریب دو نشستوں پر مشتمل تھی ۔ پہلی نشست میں مختلف شعبہ ہائے جات میں نمایاں کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والوں کو ایورڈز سے نوازا گیا۔ کو آرڈینیٹرجگنو انٹرنیشنل ،موریشیس ، محترم اختر ہاشمی، صدرجگنو انٹرنیشنل،لاہور محترمہ شگفتہ غزل ہاشمی، میڈیا کوآرڈینیٹر،میانوالی، جناب سید صداقت نقوی،اور محترم ضماد گریوال کنوینیئرلاہور کو جگنو انٹرنیشنل کی جانب سے شیلڈز آف نامینیشن پیش کی گئیں ۔ایوارڈز کی کیٹیگری میںسوشل میڈیا ایوارڈ جناب حسیب اعجاز عاشر،یو اے، خدمات برائے فروغِ سیاحت جناب مقصود چغتائی،ادبی ستارے ایوارڈ، دوادبی جوڑوں ،شگفتہ غزل ہاشمی، مظہر جعفری ،لاہور اورڈاکٹر لبنیٰ آصف، ڈاکٹر آصف مغل میانوالی کو عطا کئے گئے،حسنِ کارکردگی ایوارڈ(شعرو سخن)محترم زیڈ اے زلفی۔ وزیرآبادحسنِ کارکردگی ایوارڈ(صنفِ نثر)بشریٰ اقبال ملک،جرمنی ، محترمہ بشریٰ فرخ، پشاور کو نشانِ اعزاز سے اور محترم اختر ہاشمی، موریشیس کو اخترِ ادب کے خطاب سے اورمحترم کیپٹن(ر) عطا محمد خاں،ایگزیکٹو ڈائریکٹر، الحمرا آرٹس کونسل،لاہور کو ان کی بے لوث خدمات کے اعتراف میںفروغِ ادب،فن و ثقافت ایوارڈ سے نوازا گیا۔لوحِ اعزاز برائے پذیرائی منصبِ صدارت شاعر،ادیب،دانشور،بانی و صدر ،اردو تحریک عالمی، یوکے،ڈاکٹر عبدالغفار عزم،لندن کو پیش کیا گیا۔ احمد خیال کو ان کی کتاب ’’ستاروں سے بھرے باغات‘‘ اورمحترمہ فرزانہ فرحت ،انگلینڈکو’’خواب خواب زندگی‘‘پر ایوارڈ دیئے گئے۔جناب ندیم بخاری و عتیق خاں نیازی میانوالی ،ہمایوں شرافت، محترمہ تسنیم کوثر،ایس ایچ ایس ، ریئل بلڈرز اینڈ اسٹیٹ، بحریہ ٹاؤن ، لاہورانور جاوید ہاشمی،رسالپور،شاعر،ادیب،سجاد ہاشمی،کراچی کو شیلڈ آف آنر سے نوازا گیا۔
دوسری نشست میں ڈاکٹر عبدالغفار عزم کے شہرہ آفاق مجموعہ کلام ــ ’’ نقشِ اول‘‘ کی تقریبِ رونمائی اور مشاعرہ کا اہتمام کیا گیا۔ ڈاکٹر عبدالغفار کی کتاب کی نقاب کشائی کی رسم جناب کیپٹن(ر) عطا محمد خاںنے اپنے دستِ مبارک سے کی ۔ ان کی شخصیت اور فن پر مقالات پڑھے گئے۔ایم زیڈ کنولؔ نے اردو تحریک عالمی یوکے کے حوالے سے ڈاکٹر عبدالغفار عزم کی شخصیت کا احاطہ کرتے ہوئے ان کا تعارف کراتے ہوئے کہا کہ ’’ ڈاکٹر عبدالغفار عزم نے کئی عشروں سے اردو تحریک عالمی کے نام سے ادبی دنیا کی ایک مقبول اور جانی پہچانی انجمن کے بانی کی حیثیت سے اس کی خشتِ اول سے لے کر تزئین تک ، خود ایک معمار کی طرح عرق ریزی کی ہے ۔ ان کے جذبوں کی سچائیوں نے انہیں محبتوں اور ریاضتوں کا تاج محل بنا دیا ہے ۔چوالیس سال کی اس سیادت نے انہیں ایسا پارس بنا دیا ہے کہ جو اِن کے قریب سے بھی گزر جائے وہ سونا بن جاتا ہے۔آج کی نفسانفسی اور ادبی طوائف الملوکی کے دور میں ڈاکٹر عبد الغفار عزم نہ صرف خود چمنِ ادب کو اپنے لہو سے سینچ رہے ہیں بلکہ اس کی بہار کو سدا بہار کرنے کے لئے،، دیارِ مغرب ،،میں مشرقی روایتوں کے فروغ کے لئے ساری دنیا سے گوہرِ نایاب چُن چُن کر ایک ایسی منفرد بستی بسائے بیٹھے ہیں ،جس کی آباد کاری جغرافیائی سرحدوں سے بے نیاز ہے۔ساکنانِ شعر و سخن دنیا کے جس گوشے میں بھی آباد ہیں اس بستی کی شہریت اپنے لئے اعزاز سمجھتے ہیں۔ جس کا نہ کوئی رنگ ہے ، نہ نسل، نہ مذہبی قد غن ہے نہ جغرافیائی حدود،جہاں گاگر اور ساگر میں کوئی تفریق نہیں۔ اِس کی بنیاد رکھنے سے لے کر آج تک سخنورانِ ادب کے لئے آپ ایک شجرِ سایہ دار بن کر سایہ بھی دے رہے ہیں اور ٹھنڈک بھی، خوشبو بھی اور طراوت بھی،ا ور پھر قطب ستارے کی طرح میرِ کارواں بن کر سرگرمِ عمل ہیں۔‘‘ اختر ہاشمی اورشگفتہ غزل ہاشمی نے ڈاکٹر عبدالغفار عزم کے شعری محاسن اجاگر کرتے ہوئے انہیںشاندار خراجِ تحسین پیش کیا۔عاشق رحیل نے لندن میں ان کی فروغِ ادب کے لئے کی جانے والی کوششوں کا اجمالی جائزہ پیش کیا۔بعد میں ڈاکٹر عبدالغفار عزم کے اعزاز میں محفلِ مشاعرہ کا انعقاد کیا گیا۔ اختر ہاشمی ، اورشگفتہ غزل ہاشمی نے ڈاکٹر عبدالغفار عزم کے شعری محاسن اجاگر کرتے ہوئے انہیںشاندار خراجِ تحسین پیش کیا۔عاشق رحیل نے لندن میں ان کی فروغِ ادب کے لئے کی جانے والی کوششوں کا اجمالی نقشہ پیش کیا۔بعد میں ڈاکٹر عبدالغفار عزم کے اعزاز میں محفلِ مشاعرہ کا انعقاد کیا گیا۔ جس میںڈاکٹر سعادت سعید، سلیم شہزاد، پروفیسر عاشق رحیل، نزاکت علی عازم (میر پور) اعجاز اللہ ناز،جاوید قاسم،عمرانہ انعم،زاہد ہما شاہ، اعجاز فیروز اعجاز،ذاکر خواجہ، عمرانہ انعم، روبیہ جیلانی،پروفیسر نذر بھنڈر ، ڈاکٹر ایم ابرار، ممتاز راشد لاہوری، جاوید قاسم ، ، مظہر قریشی ،ندا سرگودھوی ،آغا ارشد ،میاں صلاح الدین ،ڈاکٹرفاخرہ شجاع ،،کرن شجاع ،ڈاکٹر فرخ، ندا سرگودھوی ، ،ارشد منظور،عمران حفیظ، ،نثار منیر،ایم عثمان محمود،مظہر جعفری، ،اسد علی باقی،اعجاز اللہ ناز،اعجاز ثاقب،سلمان رسول،سہیل یار،بشیر ناطق،نزاکت علی عازم ،سلیم صابر،ڈاکٹر عنبرین ،،لیاقت عیش، اور منصور فائز،سمیت مقامی اور بیرونِ ممالک اور پاکستان بھر سے تشریف لائے ہوئے مہمان شعراء کے علاوہ مقامی شعراء کی ایک کثیر تعداد نے شرکت کی۔ جسے ڈاکٹر ثروت زہرا سنبل (سیکرٹری فنانس) اقبال کمبوہ (سیکرٹری سوشل میڈیا)وحید اقبال (ڈی ایم ڈیجیٹل،مانچسٹر، ) ساجد خان،عائشہ بنت الاکرام،عبدالماجد ملک، سلیم صابر،اقصیٰ سعید،عون محمد عون،ایم اقبال قریشی،ریحانہ طارق،شمائل حاضر،نثار منیر نثار،افتخار احمد،فوزالرحمٰن فیضی،مرزا افتخار حسن بیگ،محمد منیر بٹ،غلام ربانی مرزا،حسن اختر چوہدری،مصدق خالد، انجینئر عبدالخالد (یو اے ای) آصف نقوی، ریاض جسٹس،آغا ارشد،نگہت اکرم ،زاہدہ رحیل،عمر مقبول علی،قاری ضیاء الرحمٰن،شرجیل احمر،جاوید اقبال،علی رضا رضی،شفیق عطاری،محمود اے طراز،علامہ سید اعجاز محبوب رضوی ،(یو۔کے)،طارق فیض ،شعیب احمد،محمد عثمان محمود،احمد فہیم میو،سید اجلال حیدر زیدی ،مزمل شہزاد،ایم بلال،نعمان انور،حمزہ علی سید،ایم شیراز انجم، قریشی مظہر،ایم شیراز قریشی اورسہیل یارکی شرکت نے یادگار بنا دیا۔ کوہِ نور ٹی ۔وی چینل نے پورے پروگرام کی بھر پور ریکارڈنگ کی ۔ آخر میں پُر تکلف طعام سے تواضع فرمائی گئی۔ یوں یہ تقریب رات گئے تک جاری رہی۔پروگرام کے آخر میں پُر تکلف طعام سے تواضع فرمائی گئی۔
13015511_687076698062401_2789142264696679531_n
12987036_687091881394216_4703838905110952388_n

About ڈاکٹر محمد راغب دیشمکھ

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*

Scroll To Top
error: Content is protected !!
Visit Us On TwitterVisit Us On Facebook